آن لائن ہیلتھ کئیر سہولیات پر سائبر حملے

No photo description available.

کورونا وبا کے دوران دنیا بھر میں ہسپتالوں و دیگر آن لائن ہیلتھ کئیر سہولیات پرسائبر حملوں میں اضافہ رہا ہے۔ ہیکرز تاوان کا مطالبہ کرنے لگے۔ہسپتالوں کے ڈیٹا بیس اور آن لائن ہیلتھ کئیر سہولیات کو محفوظ بنانے کے لیے اقدامات اٹھانے کی اشد ضرورت ہے تا کہ آئندہ ہونے والے سائبر حملوں سے بچا جا سکے۔ ان خیالا ت کا اظہار سائبر سکیورٹی آف پاکستان کے سائبرایکسپرٹ محمداسدالرحمن نے کیا۔انہوں نے کہا کہ کورونا وبا کے دوران آن لائن ہیلتھ کئیر سہولیات کو ترجیح دی جانے لگی اور کئی آن لائن ہیلتھ کئیر سروسز وجود میں آئی ہیں لیکن ان کی ناقص سکیورٹی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے دنیا بھر میں آن لائن ہیلتھ کئیر سہولیات پر سائبر حملوں کے واقعات روز بروز بڑھتے جا رہے ہیں۔ ہیکرز جعلی ای میلز یا کسی اور ذریعے سے لنک بھیجتے ہیں جس کے ذریعے مریضوں کی ذاتی معلومات چوری کر لیتے ہیں یا پھر ہسپتال کے ڈیٹا کو لاک کر کے تاوان کا مطالبہ کرتے ہیں۔ انہوں نے حفاظتی اقدامات بتاتے ہوئے کہا کہ ہسپتال کے سافٹ وئیرز کو اپ ڈیٹ رکھا جائے۔ کسی بھی مشکوک ای میل سے کوئی فائل ڈاؤن لوڈ نہ کی جائے اور نہ ہی کسی انجان ذرائع سے آنے والے لنکس پر کلک کیا جائے۔ کوشش کریں کہ پیڈ سافٹ وئیرز استعمال کریں اور صرف آفیشل ویب سائٹس سے سافٹ وئیر ڈاؤن لوڈ کریں۔انہوں نے اس بات پہ ذور دیا کہ سافٹ وئیرز کو وقتاً فوقتاً اپ ڈیٹ کرتے رہیں اور ہسپتال کے کمپیوٹر آپریٹرز کی مخصوص سائبر سکیورٹی مشقیں کرائی جائیں تا کہ وہ کسی بھی طرح کے سائبر حملے سے نمٹنے کے لیے ابتدائی ایمرجنسی رسپانس کر سکیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں