سوشل میڈیا پر معلومات چرانے کے لیے جعلی لنکس کا استعمال عام

No photo description available.
Image may contain: text

سوشل میڈیا پر جعلی لنکس پھیلا کر معصوم شہریوں کی معلومات چرانے کے واقعات میں اضافہ ہو گیا ہے۔ دھوکے باز عوام کی لالچ سے فائدہ اٹھا تے ہوئے سوشل میڈیا پر جعلی لنک پھیلا رہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار سائبر سکیورٹی آف پاکستان کے سائبرایکسپرٹ محمداسدالرحمن نے سوشل میڈیا پر گردش کرنے والے جعلی لنکس کے متعلق تفصیلات بتاتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا ان دنوں سوشل میڈیا پر فری بیلینس، فری پیکجز، یا دیگر مراعاتی یا لالچ دینے والے جعلی لنکس گردش کر رہے ہیں۔ عوام بغیر تصدیق کیے ان لنکس پر کلک کرنے کے ساتھ ساتھ دوسروں کے ساتھ بھی شئیر کر رہی ہے۔عوام کو مطلع کیا جاتا ہے کہ ان میں کوئی صداقت نہیں۔یہ دھوکے بازوں کی جانب سے تیار کردہ لنکس ہے جس کے ذریعے وہ عوام کا ڈیٹا چوری کرتے ہوئے انہیں نقصان پہنچاتے ہیں۔ واٹس ایپ گروپس ان لنکس کے پھیلنے کی سب سے بڑی وجہ ہے۔ہیکر ز یا دھوکے بازوں کے لیے یہاں شکار کرنا بہت آسان ہو جاتا ہے کیوں کہ وہ گروپ میں میسج کرتے اور کئی لوگ ان کے بھیجے گئے لنکس پر کلک کرنے سے فراڈ کی زد میں آجاتے ہیں۔گروپ ایڈمنز سے گزارش ہے کہ ان ناسوروں سے نجات کے لیے حکومتی اداروں کا ساتھ دیتے ہوئے اپنی ذمہ داری نبھائیں اور ان جھوٹے لنکس سینڈ کرنے والے کو بغیر کسی وارننگ کے فوراً گروپ سے نکال دیں تا کہ ان دھوکے بازوں اور جعلی لنکس کے پھیلاؤ کو رکا جا سکے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں