سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک کے بچاس کروڑ سے زائد صارفین کی ذاتی معلومات آن لائن ہیکنگ فورمزپر شائع کر دی گئی

سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک کے بچاس کروڑ سے زائد صارفین کی ذاتی معلومات آن لائن ہیکنگ فورمزپر شائع کر دی گئی ہیں۔ لیک ہونے والے صارفین کی ذاتی معلومات تک رسائی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے آن لائن جرائم، ہیکنگ اور مارکیٹنگ کے مقاصد کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے۔ان خیالات کا اظہار سائبر سکیورٹی آف پاکستان کے چیف ٹیکنالوجی آفیسر محمد اسد الرحمن نے فیس بک صارفین کا ڈیٹا لیک ہونے کے متعلق پیش آنیوالے خطرات کے متعلق میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔سوشل میڈیا ایپ کی ناقص سکیورٹی کا اندازہ اس سے لگایا جا سکتا ہے کہ دو ماہ قبل فروری میں بھی ہیکرز نے فیس بک کا ڈیٹا چوری کر کے صارفین کے پچاس کروڑ نمبر ٹیلی گرام پر فروخت کیلئے پیش کر دیئے تھے۔انہوں نے کہا کہ فیس بک و دیگر سوشل میڈیا ویب سائٹس کے ہیک ہونے کے بے شمار واقعات تاریخ میں موجود ہیں لہذاصارفین کو اپنی ذاتی معلومات سوشل میڈیا پہ شیئر کرتے ہوئے محتاط رہنے کی ضرورت ہے۔ خواتین اپنے فیملی ممبرز کو ذاتی تصاویر بھیجنے کے لیے فیس بک میسنجر کا استعمال کرتے ہیں جو کہ فیس بک ہیک ہونے کی صورت میں پریشانی کا سبب بن سکتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں